طالبان نے پاراچنار میں خودکش حملے کی ذمہ داری قبو ل کرلی26مومنین شہید اور 40 سے زائد شدید زخمی

Posted: 18/02/2012 in All News, Breaking News, Important News, Local News, Pakistan & Kashmir, Religious / Celebrating News

دہشت گرد وکالعدم تحریک طالبان کے علاقائی رہنما دہشت گرد ملا فضل سعید نے پاراچنار میں شیعہ مسلمانوں پر ہونے والے خد کش حملے کی ذمہ داری قبول کر لی ہے جسمیں 26 شیعہ مسلمان شہید اور 47 سے زائد شدید زخمی ہیں۔طالبان کے دہشت گرد لیڈر نے نا معلوم مقام سے رائٹر کو ٹیلی فون پر بتاتے ہوئے کہاکہ طالبان کی جانب سے شیعہ مسلمانوں کو حملہ کا نشانہ بنانے کی وجہ ان کا طالبان مخالف سرگرمیوں میں ملوث ہونا ہے، اس نے مزید کہا کہ ہم علاقے کی پولیٹیکل ایڈمنسٹریشن کو بھی متنبہ کرتے ہیں کہ ہمارے معاملات میں شیعہ مسلمانوں کا ساتھ نہ دیں۔ واضح رہے کہ خودکش بمبار نے اپنے آپ کو فاروقیہ مسجد کے پاس جہاں شیعہ آبادی واقع ہے اپنے آپ کو دھماکہ سے اڑا لیا، جس میں 26شیعہ مسلمان موقع پر ہی شہید ہوگئے اور 40 سے زائد شدید زخمی ہوگئے۔ کرم ایجنسی پاکستان کے سرحدی علاقوں میںواقع ہے جہاں شیعہ مسلمانوں کی اکثریت ہے ۔کرم ایجنسی پچھلے تین دہا ہیوں سے دہشت گردی کی بھینٹ چڑھا ہوا ہے ۔دہشت گردی کے ان وارداتوں میں حکومتی سرپرستی کے حامل طالبان ملوث ہے ، تحریک طالبان القائدہ اور افغانی طالبان پاکستان کے سحدی علاقوں میں شیعہ مسلمانوں کے خلاف دہشت گردی کا سلسلہ سالوں سے جاری ہے مگر حکومت پاکستان اس کا نوٹس نہیں لیتی

Comments are closed.