ویلنٹائن ڈے اورگلوبل ویلج کے اصطلاح کے نام پر مسلمان نوجوانوں کو گمراہ کیا جا رہا ہے، آئی ایس او پاکستان

Posted: 14/02/2012 in All News, Educational News, Important News, Local News, Pakistan & Kashmir, Religious / Celebrating News

مرکزی سیکرٹری اطلاعات کا کہنا ہے کہ جو قومیں اپنی ثقافت کو فراموش کر دیتی ہیں وہ راستے کا ایسا پتھر بن جاتی ہیں جن کو ٹھوکر مارنا ہر راہگیر اپنا حق سمجھتا ہے۔امامیہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے ترجمان سلمان عابد کا کہنا ہے کہ ویلنٹائن ڈے غیراسلامی ہے اس کو منانا استعمار کی اقتداء کرنے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہودیوں نے ایک مخصوص سازش کے تحت اپنے بے ہودہ ایام مسلمان ملکوں میں داخل کر دیے ہیں اور میڈیا کے ذریعے ان کی اس انداز میں تشہیر کروائی ہے کہ ایسے لگتا ہے کہ یہ ہماری ثقافت کاحصہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جو قومیں اپنی ثقافت کو فراموش کر دیتی ہیں وہ راستے کا ایسا پتھر بن جاتی ہیں جن کو ٹھوکر مارنا ہر راہگیر اپنا حق سمجھتا ہے۔ سلمان عابد نے کہا کہ ہمارے نوجوانوں کو ایسے ایام منانے سے گریز کرنا چاہیے، ایسے ایام منانے کے پیچھے استعمار کے مخصوص مقاصد ہوتے ہیں جن کے حصول کے لئے وہ مختلف ذرائع استعمال کرتے ہیں۔ انہوں نے میڈیا سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ میڈیا کے ذمہ داران کو استعمار کا آلہ کار نہیں بننا چاہیے بلکہ ویلنٹائن ڈے اورگلوبل ویلج کے نام پر نہ خود گمراہ ہوں نہ دوسرں کو کریں۔ انہوں نے کہا کہ یہود و ہنود نے کبھی ہمارے تہوار نہیں منائے بلکہ ان دنوں میں یہ کہہ کر کہ یہ مسلمانوں کے تہوار ہیں الگ ہو جاتے ہیں لیکن ہمیں مجبور کیا جاتا ہے کہ ہم ان کے تہواروں کو منائیں۔ نیا سال، ویلنٹائن ڈے اور کرسمس تک ایسے تہوار ہیں جو عیسائیوں سے زیادہ ہم مناتے ہیں۔ سلمان عابد نے کہا کہ ہم نوجوانوں سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ استعمار کی سازشوں کا شکار نہ ہوں بلکہ باشعور ہونے کا ثبوت دیتے ہوئے ان تہواروں کا بائیکاٹ کریں۔

Comments are closed.