ایبٹ آباد، ملٹری اکیڈمی پر راکٹ حملے

Posted: 28/01/2012 in All News, Breaking News, Important News, Local News, Pakistan & Kashmir

پاکستانی شہر ایبٹ آباد میں واقع ملٹری اکیڈمی پر متعدد راکٹ داغے گئے ہیں۔ اس حملے سے کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں تاہم اکیڈمی کی بیرونی دیوار کو نقصان پہنچا ہے۔  ایبٹ آباد میں جمعے کی صبح پاکستانی فوج کی ایک اکیڈمی پر ہوئے اس حملے کی ذمہ داری کسی نے قبول نہیں کی ہے۔ یہ وہی مقام ہے جہاں سے کچھ ہی فاصلے پر دہشت گرد تنظیم القاعدہ کے سابق رہنما اسامہ بن لادن کا گھر تھا۔ گزشتہ برس دو مئی کو امریکی کمانڈوز نے ایک خفیہ آپریشن کرتے ہوئے اسی گھر میں اسامہ بن لادن کو ہلاک کیا تھا۔ خبر رساں ادارے اے ایف پی نے مقامی حکام کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ علی الصبح مقامی وقت کے مطابق قریب تین بجے پاکستان ملٹری اکیڈمی کاکول پر راکٹ داغے گئے۔ پاکستانی حکام نے بھی اس واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ نو راکٹ داغے گئے، جس سے تین راکٹ اکیڈمی کی بیرونی دیوار سے ٹکرائے۔عسکری حوالے سے انتہائی اہم تصور کیے جانے والے شہر ایبٹ آباد اعلیٰ پولیس اہلکار امتیاز حسین شاہ نے کہا ہے کہ اس حملے میں کوئی بھی ہلاک یا زخمی نہیں ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سکیورٹی فورسز نے علاقے کی ناکہ بندی کرنے کے بعد سرچ آپریشن شروع کر دیا ہے۔  امتیاز حسین شاہ کے بقول اس علاقے میں سکیورٹی ہر وقت الرٹ رہتی ہے، اس لیے توقع کی جا رہی ہے کہ اس پر تشدد کارروائی کے بارے میں حقائق جلد ہی اکٹھے کر لیے جائیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس حملے کی ذمہ داری کسی نے قبول نہیں کی ہے۔ تاہم یہ خیال کیا جا رہا ہے کہ اسامہ بن لادن کی ہلاکت کے بعد شائد القاعدہ کے حامی جنگجوؤں نے اس اکیڈمی کو دہشت گردی کا نشانہ بنانے کی کوشش کی ہو۔

Comments are closed.