نیٹو کنٹینرز کو روک دیں گے’ دفاع پاکستان کانفرنس

Posted: 23/01/2012 in All News, Local News, Pakistan & Kashmir

ملک بھر کی مذہبی ،سیاسی و کشمیری جماعتوں کے قائدین، عسکری ماہرین،جید علماء کرام ، طلبا، وکلاء اور تاجر رہنمائوں نے دفاع پاکستان کونسل کی دفاع پاکستان کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ نیٹو کی سپلائی لائن بحال کرنے کی کوشش کی گئی تو کراچی سے خیبر تک لوگ سڑکوں پر نکل کر کنٹینروں کو زبردستی روکیں گے اور اس کے لئے سپلائی روٹ پر دھرنے دیں گے، وزیر اعظم امریکی جنگ سے الگ ہونے کی تاریخ دیں، پارلیمنٹ اور سیاسی جماعتیں ملکی دفاع میں ناکام ہو گئیں، پاکستان کی سرزمین افغان بھائیوں کے خلاف استعمال نہیں ہونی چاہیے،بھارت کو پسندیدہ ملک قرار دیکر تجارت ملک کو اپاہج بنانے اور تباہ و برباد کرنے کے مترادف ہے،  بھارت پاکستانی دریائوں پر سے قبضہ چھوڑ دے ، دریائوں میں پانی نہیں آئے گا تو پھر خون بہے گا، پاکستانی حدود میں گھسنے والے ڈرون طیارے مار گرائے جائیں، ہم لڑنا نہیں چاہتے لیکن اگرا مریکہ نے پاکستانی سرحدوں کو پامال کرنا نہ چھوڑا تو پھر فیصلے میدانوں میں ہوں گے،دفا ع پاکستان کونسل کشمیر کمیٹی کی طرف سے بھارت کو پسندیدہ قرار دینے کی سفارشات کی شدید مذمت کرتی ہے۔  لیاقت باغ راولپنڈی میں ہونے والی دفاع پاکستان کانفرنس سے دفا ع پاکستان کونسل کے چیئرمین مولانا سمیع الحق، امیر جماعت الدعوة پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید، جنرل(ر)حمید گل، سید منور حسن ، شیخ رشید احمد، صاحبزادہ ابوالخیر زبیر،اعجاز الحق ،پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی، سردار عتیق احمد خاں، جنرل (ر)مرزا اٍٍٍٍسلم بیگ و دیگر نے خطاب کیااس موقع پر محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان اور آمنہ مسعود جنجوعہ کا پیغام بھی پڑھ کر سنایا گیا۔ حافظ محمد سعید کے خطاب سے قبل لاکھوں شرکاء کی جانب سے زبردست نعرے بازی کی گئی اور شرکاء نے کھڑے ہوئے ان کا بھرپور استقبال کیا۔دفاع پاکستان کونسل کے چیئرمین مولانا سمیع الحق نے اپنے خطاب میں کہاکہ ملک کے تحفظ اور امریکی تسلط سے آزادی کیلئے ہمیں اللہ نے ایک کر دیا ہے پورا ملک غیروں کے رہم و کرم پر ہے ایک جرنیل نے فوج سے غداری کی سب کو بے بس کر کے ظالم کی گود میں ڈال دیا ہمیں مشرف کی پالیسیاں ختم کرنا ہوں گے اور امریکہ کی حمایت سے نکلنا ہوگا۔

Comments are closed.