ایران: ايٹمي سائنسدان کو امريکا نے قتل کيا

Posted: 15/01/2012 in All News, Important News, Iran / Iraq / Lebnan/ Syria, USA & Europe

تہران … ايران نے اپنے ايٹمي سائنس دان کے قتل کا الزام امريکا پر عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس کے پاس اپنے دعوے کے حق ميں ثبوت بھي موجود ہيں. سرکاري ٹي وي کے مطابق ايراني وزارت خارجہ نے تہران ميں امريکي مفادات کي نمائندگي کرنے والے سوئٹزر لينڈ کے سفير کو ايک خط ديا ہے. خط ميں کہا گيا ہے کہ ايران کے پاس قابل بھروسہ دستاويزات اور شواہد موجود ہيں کہ ايٹمي سائنس دان کے قتل کے منصوبے اور عملدرآمد ميں سي آئي اے کے ايجنٹ ملوث ہيں. ايراني ٹي وي کے مطابق ايک مذمتي خط برطانوي حکومت کو بھي بھيجا گيا ہے جس ميں کہا گيا ہے کہ ايراني ايٹمي سائنس دانوں کے قتل کا سلسلہ 2010ء ميں برطانوي خفيہ ايجنسي کے سربراہ جان سيورز Sawers کے اس بيان کے بعد شروع ہوا جس ميں انہوں نے ايران کے خلاف انٹيلي جنس آپريشنز کے آغاز کا اعلان کيا تھا. دو سال ميں ايران کے 5 ايٹمي سائنس دانوں کو قتل کيا جاچکا ہے. ايٹمي سائنس دان مصطفي احمدي تين دن پہلے تہران ميں بم دھماکے ميں مارے گئے تھے

Comments are closed.