پاکستانی کا قتل، تین ایرانی سرحدی محافظ گرفتار

Posted: 02/01/2012 in All News, Important News, Iran / Iraq / Lebnan/ Syria, Local News, Pakistan & Kashmir

تین ایرانی سرحدی محافظوں کو پاکستانی سرحد میں داخل ہو کر ایک پاکستانی کو ہلاک کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیاصوبہ بلوچستان کے حکام نے خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا ہے کہ یہ واقعہ اتوار کو واشک ڈسٹرکٹ کے مازان سار ماشکیل نامی علاقے میں پیش آیا۔ یہ مقام ایرانی سرحد سے تین کلو میٹر کی دوری پر واقعہ ہے۔ اطلاعات کے مطابق یہ تینوں ایرانی سرحدی محافظ ایک گاڑی کا تعاقب کرتے ہوئے پاکستانی سرحد میں داخل ہوئے اور انہوں نےکار پر فائرنگ کردی، جس کے نتیجے میں کار میں سوار دو پاکستانی شہری زخمی ہوگئے اور ان میں اس ایک بعد ازاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہو گیا۔ واشک ڈسٹرکٹ کے ڈپٹی کمشنر سعید احمد جمالی نے اے ایف پی کو بتایا، ’تینوں ایرانی سرحدی محافظوں کو پاکستانی سرحد میں داخل ہونے اور ایک پاکستانی کو ہلاک کرنے کے کے الزامات میں حراست میں لے لیا گیا ہے۔‘ انہوں نے بتایا کہ ایرانی محافظ ان بھائیوں کو ایران لے جانا چاہتے تھے۔ماشکیل کا علاقہ کوئٹہ کےجنوب مغرب سے چھ سو کلو میٹر دور واقع ہے۔ ایران کے صوبے سیستان بلوچستان سے ملحق یہ پاکستانی علاقہ بلوچستان صوبے میں دیگر علاقوں کی نسبت زیادہ پر تشدد خیال کیا جاتا ہے۔وہ تین ایرانی سرحدی محافظ بدستور پاکستانی حکام کی تحویل میں ہیں، جنہیں سرحد عبور کر کے پاکستان میں داخل ہونے اور ایک پاکستانی شہری کو ہلاک کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔

Comments are closed.