سی آئی اے کے جاسوس نے ایرانی ٹی وی پراپنے جرم کا اعتراف کر لیا

Posted: 19/12/2011 in All News, Breaking News, Iran / Iraq / Lebnan/ Syria, USA & Europe

ایران کے سرکاری ٹی وی پر سی آئی اے کے جاسوس نے اپنے جرائم کا اعتراف کر لیا۔برطانوی اخبار ’ٹیلی گراف‘ کے مطابق ایرانی حکام کی طرف سے سی آئی اے کے ایک مبینہ جاسوس کوگرفتار کرنے کے بعد ایران کے سرکاری ٹیلی ویژن پر اسے اپنے جرائم کا اعتراف کرتے دکھایا گیا۔پہلے سے ریکارڈ ایک انٹرویو میں ایران کے امیر مرزا حکمتی نے اعتراف کیا کہ اس نے امریکی انٹیلی جنس کی طرف سے تربیت حاصل کی اور عراق اور افغانستان میں فوجی اڈوں پر وقت گزارا ۔ایران کے IRIB چینل میں اس نے کہا کہ اسے ایرانی انٹیلی جنس کو غلط معلومات فراہم کرنے کے لئے ایران بھیجاگیا۔حکمتی جو فوٹیج میں کسی دباوٴ کے بغیرپرسکون نظرآیا اسے حکام نے ہفتہ کے روز گرفتار کیا تھا۔اس کے مطابق اسے (امریکی ایجنٹوں) نے کہا کہ اگر تم اس مشن میں کامیاب ہوگئے تو ہم تجھے مزیدتربیت دے سکتے ہیں اور دیگر مشن پر بھیج سکتے ہیں۔ چینل کے اہم خبرو ں کے بلیٹن میں یہ ویڈیودکھائی گئی۔ حکمتی کا کہنا ہے کہ وہ بگرام میں ایک جاسوسی کے مرکز پر رہا وہاں سے دبئی گیا اور دبئی سے ایران پہنچا۔تاہم اس نے اس سفر کی کسی تاریخ کا ذکر نہیں کیا۔حکمتی کے مطابق وہ ایریزونا میں پیدا ہوا اور اس نے2001 میں امریکی فوج میں شمولیت اختیار کی۔اس نے 2005سے2007تک امریکی سائبر انٹیلی جنس میں بھی کام کرنے کا دعویٰ کیا۔ایرانی حکام کے مطابق اس نے مشرق وسطی کی زبانوں کو سیکھنے کیلئے خصوصی کلاسیں لیں۔ایرانی حکام کے مطابق 15سے زائد افراد کوواشنگٹن اور اسرائیل کے لیے جاسوسی کا مجرم ٹھہرایا گیا ہے انہیں جاسوسی کے جرم میں سزائے موت ہو سکتی ہے۔

 

Comments are closed.