کابل اور مزار میں عاشورا دھماکے پاکستان کی لشکر جھنگوی نے کئے، حامد کرزئی

Posted: 10/12/2011 in Afghanistan & India, All News, Breaking News, Important News, Pakistan & Kashmir, Religious / Celebrating News, Saudi Arab, Bahrain & Middle East

افغان صدر نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ پاکستان اپنی حدود میں ہونے والے نیٹو کے حملے کے بعد دنیا اور میڈیا کی توجہ افغانستان کی طرف فرقہ واریت کا بازار گرم کر کے کرنا چاہتا ہے۔لشکر جھنگوی اور فرقہ واریت کا افغانستان میں کوئی وجود  نہیں، یہی وجہ ہے کہ روز عاشورا معصوم بچوں اور خواتین سمیت عزاداروں کو  شہید کرنے والے سفاک دہشتگردوں نے پاکستان سے ذرائع ابلاغ کو ٹیلفون  کرکے اس خونی واقعے کی ذمہ داری لی۔ حامد کرزئی کا کہنا ہے کہ کابل اور مزار میں عاشورا دھماکے پاکستان کی لشکر جھنگوی نے کئے، افغان صدر نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ پاکستان اپنی حدود میں ہونے والے نیٹو کے حملے کے بعد دنیا اور میڈیا کی توجہ افغانستان کی طرف فرقہ واریت کا بازار گرم کر کے کرنا چاہتا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس سے پہلے بھی سعودی عرب متحدہ عرب امارات اور پاکستان نے طالبان کا فتنہ خلق کر کے مزار شریف و بیامیان میں اہل تشیع مسلمانوں کا قتل عام کرکے مظلوموں کے خون سے اپنے ہاتھ رنگ کر یزیدیت کی حمایت کی تھی۔ اس سال عاشورا دھماکوں کا ثبوت یہ ہے کہ روز عاشورا معصوم بچوں و خواتین سمیت عزاداروں کو شہید کرنے والے سفاک دہشتگردوں نے پاکستان سے ذرائع ابلاغ کو ٹیلیفون کر کے اس خونی واقعے کی ذمہ داری لی ہے۔

Comments are closed.