سانحہ نمائش چورنگی:شہید اسکاؤٹس کے قتل کا مقدمہ شناخت کے باوجود نا معلوم افراد کے خلاف درج

Posted: 30/11/2011 in All News, Breaking News, Important News, Local News, Pakistan & Kashmir, Religious / Celebrating News

سانحہ نمائش چورنگی میں کالعدم دہشت گرد گروہوں سپاہ صحابہ اور لشکر جھنگوی کے ناصبی وہابی دہشت گردوں کی فائرنگ کے نتیجہ میں شہید ہونے والے دو شیعہ اسکاؤٹس زین العابدین اور محمد اظہرعلی کے قتل کا مقدمہ نامعلوم دہشتگردوں کے خلاف درج کرکے مقدمہ کو خراب کرنے کی سازش تیار کر لی گئی ہے۔پولیس نے سانحہ نمائش چورنگی میں کالعدم دہشت گرد گروہوں سپاہ صحابہ اور لشکر جھنگوی کے ناصبی وہابی دہشت گردوں کی فائرنگ کے نتیجہ میں شہید ہونے والے دو شیعہ اسکاؤٹس کے قتل کا مقدمہ نامعلوم دہشتگردوں کے خلاف پولیس کی مدعیت میں درج کر لیا ہے تا کہ ناصبی وہابی دہشت گردوں کو کاروائی اور سزا سے بچایا جا سکے ۔پولیس کی مدعیت میں مقدمہ سولجر بازار تھانے میں درج کیا گیا ہے ۔جس کے سبب ملت جعفریہ میں شدید تشویش پائی جاتی ہے جبکہ دوسری جانب سی سی ٹی وی فوٹیج سے حاصل ہونے والے شواہد کے باوجود بھی پولیس نے نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کر کے پولیس نے اپنے متعصبانہ سازشی عمل کو آشکار کر دیا ہے۔جبکہ دوسری جانب اسکاؤٹس کی شہادت کے بعد ہونے والے مظاہرے اور پر امن احتجاج کی ایف آئی آر جو کہ بریگیڈ تھانہ میں انسداد دہشت گردی کی دفعات کے تحت ایک سو پچاس نامعلوم افراد کے خلاف درج کی گئی ہے وہ ملت جعفریہ کے خلاف حکومتی سازش کا منہ بولتا ثبوت ہے۔  شیعہ عمائدین ،رہبران اور علمائے کرام کو چاہئیے کہ اس حکومتی سازش کے خلاف آواز بلند کریں تا کہ شہداء کے خون کے اصل قاتلوں کو گرفتار کیا جا سکے اور حکومت کی سازش کو جو اس نے کالعدم دہشتگرد جماعت سپاہ صحابہ کی ایماء پر تیار کی ہے اسے ناکام بنایا جا سکے۔ واضح رہے کہ پولیس نے شہر بھر میں چھاپہ مار کر کالعدم دہشت گرد گروہ سپاہ صحابہ او ر لشکر جھنوگی کے پچاس سے زائد دہشت گردوں کو گرفتار کیا ہے۔دوسری جانب وزیر داخلہ سندھ منطور وسان نے امن وامان کی صورتحال کے عنوان سے ایک اہم اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے اس بات کا اعلان کر دیا ہے کہ شہر بھر میں اسلحہ لے کر چلنے پر پابندی ہو گی اور خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے گی۔

Comments are closed.