پاکستانی سرزمین پر امریکی دہشتگردی ناقابل برداشت ہے، سید رحمن شاہ

Posted: 28/11/2011 in All News, Important News, Local News, Pakistan & Kashmir, Religious / Celebrating News, USA & Europe

آئی ایس او پاکستان کے مرکزی صدر کا کہنا ہے کہ امریکہ کی نسبت چین اور ایران پاکستان کے لئے زیادہ سازگار ہیں، چین اور ایران سے ہمارے فطری اور دیرینہ برابری کی بنیاد پر تعلقات ہیں جب کہ امریکہ ہمیں غلام سے بھی بدتر حیثیت دیتا ہےامامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی صدر برادر سید علی رحمن شاہ نے مہمند ایجنسی میں نیٹو ہیلی کاپٹرز کے حملے کی شدید لفظوں میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستانی سرزمین پر امریکی دہشت گردی ناقابل برداشت ہے، امریکا کا پاکستانی سرزمین پر حملہ پاکستانی سلامتی پر ایک سوالیہ نشان ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے اس حوالے سے موثر اقدامات نہ کئے تو حکومت کو شدید عوامی ردعمل کا سامنا کرنا ہو گا۔ سید رحمن شاہ نے مزید کہا کہ پاکستان کو اس موقع سے فائدہ اٹھاتے ہوئے امریکی اتحاد سے فوری علیحدگی کا اعلان کر دینا چاہیے، کیوں کہ پاکستان اس سے قبل بھی ملنے والے کئی مواقع ضائع کر چکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پوری قوم متحد ہے اور متحد قوم کی قوت کا ادراک کرتے ہوئے پاکستانی حکمران امریکہ کو ہمیشہ کے لئے خیر باد کہہ دیں اور ہمسایہ ممالک کے ساتھ اتحاد کر کے ایک بلاک تشکیل دیں جس میں ترکی، چین اور ایران کو شامل کر کے امریکہ کے سامنے ڈٹ جانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ کی نسبت چین اور ایران پاکستان کے لئے زیادہ سازگار ہیں، چین اور ایران سے ہمارے فطری اور دیرینہ برابری کی بنیاد پر تعلقات ہیں جب کہ امریکہ ہمیں غلام سے بھی بدتر حیثیت دیتا ہے۔ رحمن شاہ نے کہا کہ زمینی حقائق واضح کر چکے ہیں کہ امریکہ پاکستان کو دوست نہیں ہو سکتا، لہذا حکومت پاکستان فوری طور پر فیصلہ کرئے اور امریکہ کو افغانستان و پاکستان سے فوری نکل جانے کا کہہ دے۔ انہوں نے کہا کہ شہباز ائیر بیس خالی کرنا اور نیٹو سپلائی روکنا اچھا عمل ہے پوری قوم اس کی تائید کرتی ہے۔

Comments are closed.