حسین ع امن عالم کا استعارہ اور یزید دہشتگردی کی علامت ہے، گورنر پنجاب

Posted: 24/11/2011 in All News, Important News, Local News, Pakistan & Kashmir, Religious / Celebrating News

چوتیسویں انٹرنیشنل حسینیہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ افکار امام حسین علیہ السلام کی پیروی ہی وحدت المسلمین کا پیش خیمہ ہے۔خانہ فرہنگ ایران راولپنڈی اور مرکزی امام حسین کونسل کے زیر اہتمام 34 ویں سالانہ بین الاقوامی حسینیہ کانفرنس سے گورنر پنجاب سردار لطیف کھوسہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حسین علیہ السلام امن عالم کا استعارہ اور یزید دہشت گردی کی علامت ہے۔ صدارتی خطاب میں گورنر پنجاب نے کہا کہ فرقہ واریت اور دہشت گردی کے خلاف علماء و مشائخ اور تمام مکاتب فکر اتحاد و وحدت کا مظاہرہ کریں اور حکومت کا ساتھ دیں۔ امام حسین علیہ السلام نے معاشرے میں عدل و انصاف اور سچائی کی خاطر جام شہادت نوش کیا۔  ایران کے ثقافتی اتاشی اور ڈائریکٹر خانہ فرہنگ ایران راولپنڈی محمود امیر گل نے کہا افکار امام حسین علیہ السلام کی پیروی وحدت المسلمین کا پیش خیمہ ہے۔ آج ڈیڑھ ارب مسلمانوں کو اتحاد وحدت کے ساتھ اپنی اقدار کی حفاظت کرنے چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ نواسہ رسول ص حضرت امام حسین علیہ السلام کی شخصیت تمام انسانیت کے لیے مشعل راہ ہے۔  کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی امام حسین علیہ السلام کے چیئرمین غضنفر مہدی نے کہا کہ امام حسین علیہ السلام کی عظیم قربانی نے اسلام کو دائمی زندگی بخشی۔ علامہ اظہار بخاری نے کہا امام حسین علیہ السلام اور یزید میں اتنا ہی فرق ہے جتنا دہشت گردی اور جہاد میں، علامہ عبدالجلیل نقشبندی نے کہا رسول اکرم ص کی بہت سی احادیث نواسہ رسول ع کی شان میں موجود ہیں جن کا مقصد امت کو ان کے مقام و مرتبہ سے آگاہ کرنا تھا۔ خوشنود علی خان نے کہا کہ محبت حسین علیہ السلام جزو ایمان ہے۔ کانفرنس میں مولانا شمس الرحمان سواتی، سید ساقی شاہ، علامہ حسین احمد، احسان اکبر، محمد رفیق مغل اور دیگر نے خطاب کیا۔

Comments are closed.