بحرین تحقیقاتی کمیشن: بحرین میں ایران کی مداخلت کے شواہد نہیں ملے ہیں، قیدیوں کے ساتھ غیر انسانی اور انتہائی توہیں آمیز سلوک جاری

Posted: 24/11/2011 in All News, Breaking News, Religious / Celebrating News, Saudi Arab, Bahrain & Middle East

بحرین میں تحقیقاتی کمیشن کے سربراہ نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ بحرین میں ایران کی مداخلت کے شواہد نہیں ملے ہیں اور بحرین کی سکیورٹی دستوں نےگرفتار شدہ مظاہرین قیدیوں کے ساتھ غیر انسانی اور انتہائی توہیں آمیز سلوک جاری ہے۔المنار کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بحرین میں تحقیقاتی اورحقیقت یاب کمیشن کے سربراہ نے کہا ہے کہ بحرین میں ایران کی مداخلت کے شواہد نہیں ملے ہیں اور بحرین کی سکیورٹی دستوں نےگرفتار شدہ افراد  کے ساتھ غیر انسانی اور انتہائی توہیں آمیز سلوک جاری ہے۔ اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بحرینی حکام نے عوام کے ساتھ طاقت کا بے جا استعمال کیا ہے انھوں نے قیدیوں کو شکنجہ دیا ہے اور ان کے حقوق کو واضح طور پر نقض کیا ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بحرین میں ایران کی مداخلت کے کوئی شواہد نہیں ملے ہیں اور قیدیوں کے لئے صادر احکام پر نظر ثانی کی جائے کیونکہ ان احکام میں عدل و انصاف کے بنیادی اصولوں کی رعایت نہیں کی گئی ہے۔

Comments are closed.